پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) پارٹی کی ایک اہم شخصیت علی امین پر الزام

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) پارٹی کی ایک اہم شخصیت علی امین پر الزام ہے کہ انہوں نے باجوڑ کے آئندہ ضمنی انتخابات کو مشکوک طریقوں سے متاثر کرنے کی کوشش کی۔ مرحوم کارکن ریحان زیب کے بھائی مبارک زیب نے الزام لگایا کہ علی امین نے انتخابی دوڑ سے دستبردار ہونے کے عوض انہیں سرکاری نوکری کے ساتھ 7 کروڑ روپے کی خطیر رقم کی پیشکش کی۔ اس انکشاف نے تنازعہ کو جنم دیا ہے اور انتخابی عمل کی سالمیت پر سوالات اٹھائے ہیں۔

مبارک زیب کا سیاسی میدان میں آنے کا فیصلہ اس وقت سامنے آیا جب ان کے خاندان کو باجوڑ کے ضمنی انتخابات کے لیے پی ٹی آئی کی قیادت کی جانب سے ٹکٹ دینے سے انکار کیا گیا تھا۔ پارٹی کی طرف سے دھوکہ دہی کا احساس کرتے ہوئے، مبارک زیب نے پی ٹی آئی کے امیدواروں کے خلاف الیکشن لڑنے کا فیصلہ کیا، ایک ایسا اقدام جس نے پارٹی کے اندر اندرونی حرکیات اور طاقت کی کشمکش کی طرف توجہ مبذول کرائی۔

اپنے بیان میں مبارک زیب نے ضمنی انتخابات کے لیے ٹکٹوں کی الاٹمنٹ کے حوالے سے علی امین گنڈا پور، بیرسٹر گوہر، شیر افضل مروت اور علی محمد خان سمیت پی ٹی آئی کے مختلف رہنماؤں سے ہونے والی بات چیت کا تفصیلی ذکر کیا۔ مبارک زیب کے مطابق ان گفتگو کے دوران علی امین گنڈا پور نے انتخابی مقابلے سے دستبردار ہونے پر زور دیتے ہوئے 7 کروڑ روپے اور سرکاری نوکری کی پیشکش کی۔

اس الزام نے پی ٹی آئی کی قیادت کو دفاعی انداز میں کھڑا کر دیا ہے، خیبرپختونخوا میں اطلاعات کے مشیر بیرسٹر محمد علی سیف نے ان دعوؤں کی تردید کی ہے۔ سیف نے واضح کیا کہ وزیر اعلیٰ علی امین گنڈا پور نے رشوت کی پیشکش نہیں کی اور اس بات پر زور دیا کہ الیکشن لڑنا ایک بنیادی حق ہے جس میں ناجائز ذرائع سے مداخلت نہیں کی جانی چاہیے۔

مبارک زیب کی جانب سے لگائے گئے الزامات نے باجوڑ میں ضمنی انتخابات کے لیے پی ٹی آئی کی مہم پر سایہ ڈالا ہے۔ اس نے سیاسی جماعتوں کو اپنے داخلی عمل میں شفافیت اور انصاف کو برقرار رکھنے میں درپیش چیلنجوں کو بھی اجاگر کیا ہے۔

جیسے جیسے ضمنی انتخابات قریب آرہے ہیں، پی ٹی آئی کی قیادت کے لیے یہ بہت ضروری ہے کہ وہ ان الزامات کو سنجیدگی سے نمٹائے اور اس بات کو یقینی بنائے کہ انتخابی عمل کسی بھی قسم کے بے جا اثر و رسوخ یا جوڑ توڑ سے پاک رہے۔ باجوڑ کے ضمنی انتخابات کے نتائج نہ صرف خطے کے سیاسی منظر نامے پر اثرانداز ہوں گے بلکہ پی ٹی آئی کے جمہوریت اور منصفانہ کھیل کے عزم کا امتحان بھی ثابت ہوں گے۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

زلفی بخاری پی ٹی آئی چیئرمین کے مشیر برائے بین الاقوامی امور مقرر

پی ٹی آئی کے سیکریٹری جنرل عمر ایوب کی جانب سے جاری کردہ باضابطہ نوٹیفکیشن …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *