امریکی میڈیاکے مطابق مشرق وسطیٰ میں ایرانی اہداف پر حملوں کا منصوبہ بنا رہا ہے

امریکہ نے مشرق وسطیٰ میں ایرانی اہداف پر حملوں کی منصوبہ بندی کر رہا ہے، جو ممکنہ طور پر اگلے چند ہفتوں میں سامنے آ سکتا ہے۔ امریکی میڈیا ذرائع کے مطابق یہ انکشاف اردن میں ایک امریکی اڈے پر ڈرون حملوں کے بعد سامنے آیا ہے۔

میڈیا رپورٹس بتاتی ہیں کہ امریکی اقدام میں ایران کے اندر سائبر آپریشنز پر توجہ مرکوز کرتے ہوئے ایران کی سرحدوں سے باہر کے مقاصد کو نشانہ بنانا شامل ہے۔ قابل ذکر بات یہ ہے کہ اردن میں ایک امریکی تنصیب پر حالیہ ڈرون حملے اور تین امریکی فوجیوں کی ہلاکت کے ردعمل میں، امریکی صدر نے ڈرون حملوں سے جوابی کارروائی کا اعلان کیا۔ اس فیصلے سے کشیدگی میں اضافہ ہوا، جس کے نتیجے میں ایران کو سخت انتباہ دیا گیا کہ ان پر کسی بھی حملے کا سخت جواب دیا جائے گا۔

جنگ کے کسی بھی خوف کے برعکس، ایران کے پاسداران انقلاب کے سربراہ نے یقین دلایا کہ ایران کو امریکہ کے ساتھ تنازعہ میں ملوث ہونے کا کوئی خدشہ نہیں ہے۔ میجر جنرل حسین سلامی نے واضح طور پر کہا کہ ایران امریکی دھمکیوں کے سامنے خاموش نہیں رہے گا اور اس بات پر زور دیا کہ تہران واشنگٹن کے ساتھ براہ راست فوجی تصادم سے خوفزدہ نہیں ہے۔

یہ صورت حال اردن میں ایک امریکی فوجی اڈے پر ہونے والے ایک ڈرون حملے سے پیدا ہوئی ہے، جس سے یہ خیال پیدا ہوا کہ ان کارروائیوں کے پیچھے ایران ہو سکتا ہے۔ بیان بازی کے باوجود، امریکی قومی سلامتی کے ترجمان، جان کربی نے ڈرون حملے کا اعتراف کیا ہےلیکن اسے براہ راست ایران سے منسوب کرنے سے گریز کیاہے۔ اس ترقی پذیر صورتحال کی پیچیدگیاں مشرق وسطیٰ میں امریکہ اور ایران کے درمیان بڑھتے ہوئے تناؤ کے نازک توازن اور ممکنہ اثرات کی نشاندہی کرتی ہیں۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

سونے کی قیمتوں میں نمایاں کمی: ایک تولہ کی قیمت اب 242,000 روپے ہے

مقامی مارکیٹ میں سونے کی فی تولہ قیمت میں 6200 روپے کی کمی دیکھی گئی۔ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *