بلوچستان میں انتخابات سے ایک دن پہلے دھماکوں کی گونج؛ 24 جانیں ضائع ہوئیں

عام انتخابات سے ایک روز قبل، بلوچستان کے دو اضلاع میں دھماکوں نے 24 افراد کی جان لے لی
پہلے دھماکے میں، جو ضلع پشین کے علاقے خانوزئی میں ہوا، 12 جانیں گئیں۔ دوسرا دھماکہ قلعہ سیف اللہ میں جمعیت علمائے اسلام (ف) کے دفتر کے باہر ہوا جس میں مزید 12 افراد جاں بحق ہوئے۔

خانوزئی میں دھماکے کے بعد موٹرسائیکلیں تباہ ہوگئیں اور متعدد افراد زخمی ہوگئے۔ حکام نے 12 جانوں کے ضیاع کی تصدیق کی ہے۔

دھماکے کی اطلاع ملتے ہی پولیس نے فوری کارروائی کی، اور زخمیوں کو اسپتال منتقل کیا گیا۔

خانوزئی اسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ نے 12 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کی اور بتایا کہ 30 سے ​​زائد زخمیوں کو داخل کیا گیا ہے جن میں سے کئی کی حالت تشویشناک ہے۔

الیکشن لڑنے والے سابق وزیر اسفندیار کاکڑ خانوزئی میں اپنے دفتر کے باہر دھماکے میں بال بال بچ گئے۔ واقعہ کے وقت علاقے میں ایک بڑا مجمع ہونے کے باوجود کاکڑ وہاں موجود نہیں تھے۔

سابق وزیر اسفندیار کاکڑ اپنی سیاسی جماعت کی جانب سے ٹکٹ نہ ملنے پر آزاد امیدوار کے طور پر الیکشن لڑ رہے ہیں۔

وزیر داخلہ بلوچستان میر زبیر جمالی نے خانوزئی خودکش دھماکے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر کو واقعے کی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کردی

جمالی نے زور دے کر کہا کہ بزدلانہ کارروائیاں دہشت گردی کے خلاف عزم کو پست نہیں کر سکتیں۔ انہوں نے ملک کو غیر مستحکم کرنے کی کسی بھی سازش کو ناکام بنانے کے لیے اتحاد پر زور دیا۔

قلعہ سیف اللہ میں جے یو آئی (ف) کے دفتر کے باہر دھماکے میں 12 افراد جان کی بازی ہار گئے، جبکہ 17 زخمی ہوئے۔

زخمیوں کو اسپتال منتقل کرنے کے لیے ریسکیو ٹیمیں اور فائر فائٹرز فوری طور پر جائے وقوعہ پر پہنچ گئے۔

صوبائی وزیر اطلاعات کے مطابق جے یو آئی (ف) کے امیدوار مولانا عبدالواسع قلعہ سیف اللہ دھماکے میں محفوظ رہے۔

الیکشن کمیشن نے پشین میں سیاسی جماعت کے دفتر میں دھماکے کا نوٹس لیتے ہوئے چیف سیکریٹری اور آئی جی بلوچستان کو تحقیقات کرنے اور ملوث افراد کے خلاف فوری کارروائی کرنے کی ہدایت کردی
وزیراعظم انوار الحق کاکڑ نے خانوزئی اور قلعہ سیف اللہ میں دھماکوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے جانی نقصان پر گہرے دکھ کا اظہار کیا۔ انہوں نے متاثرین کے اہل خانہ سے تعزیت کی اور چیف سیکرٹری بلوچستان کو زخمیوں کو فوری طبی امداد فراہم کرنے کی ہدایت کی۔

وزیراعظم نے پرامن انتخابات کو یقینی بنانے کے لیے حکومت کے عزم کا اعادہ کیا اور حملوں کے ذمہ دار افراد کی گرفتاری کا حکم دیا۔

وزیراعلیٰ میر علی مردان خان دھومکی نے بھی پشین میں ہونے والے دھماکوں کی مذمت کرتے ہوئے وزارت داخلہ کو ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی ہدایت کی

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

سونے کی قیمتوں میں نمایاں کمی: ایک تولہ کی قیمت اب 242,000 روپے ہے

مقامی مارکیٹ میں سونے کی فی تولہ قیمت میں 6200 روپے کی کمی دیکھی گئی۔ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *