بطور حکومت وفاق سے رابطہ رکھیں گے ووٹ چوروں سےمفاہمت نہیں کرینگے: علی امیر گنڈا پور

خیبرپختونخوا کے وزیراعلیٰ علی امین گنڈا پور نے ایک پختہ اعلان کیا ہے کہ ان کی حکومت وفاقی اور صوبائی دونوں حکومتوں کے ساتھ رابطے برقرار رکھے گی، لیکن وہ ووٹ ٹمپرنگ میں ملوث افراد کے ساتھ کسی بھی قسم کے مذاکرات میں شامل ہونے سے ثابت قدمی سے انکار کریں گے۔ گنڈا پور نے ان خیالات کا اظہار اڈیالہ جیل کے باہر میڈیا سے گفتگو کے دوران کیا۔

اپنے خطاب کے دوران گنڈا پور نے اس بات پر زور دیا کہ اسٹیبلشمنٹ اور حکومتی ادارے بنیادی طور پر ان کے دائرہ اختیار میں ہیں۔ انہوں نے واضح کیا کہ اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ مذاکرات سے متعلق کسی بھی فیصلے کا تعین خصوصی طور پر پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی قیادت کرے گی، جس سیاسی جماعت سے ان کا تعلق ہے۔

گنڈا پور نے زور دے کر کہا کہ خیبرپختونخوا کی حکومت اپنے نظریاتی فریم ورک کے مطابق اپنی کوششیں جاری رکھے گی۔ انہوں نے یقین دلایا کہ مستقبل میں کسی بھی انتخابی مینڈیٹ سے سمجھوتہ یا چوری نہ ہونے کو یقینی بنانے کے لیے اقدامات کیے جائیں گے۔ گنڈا پور کی طرف سے بیان کردہ اہم ترجیحات میں امن و سلامتی کے قیام اور اسے برقرار رکھنے، روزگار کے مواقع پیدا کرنے، بنیادی سہولیات تک رسائی میں اضافہ، تعلیمی اور صحت کی دیکھ بھال کی خدمات کو بہتر بنانے اور ایک لاکھ سے زائد خاندانوں کو مالی مدد فراہم کرنے کے اقدامات شامل ہیں۔

ایک کال ٹو ایکشن میں، گنڈا پور نے 9 مئی کو ایک کمیشن کی تشکیل پر زور دیا جو غیر قانونی اقدامات سے فائدہ اٹھانے والے افراد کی تحقیقات اور جوابدہی کرے۔ انہوں نے سیاسی نظام کے اندر انصاف اور سالمیت کو برقرار رکھنے کے لیے اس قدم کی اہمیت پر زور دیا۔

مزید برآں، گنڈا پور نے اپنے پختہ یقین کا اعادہ کیا کہ پاکستان اس کے لوگوں کا ہے۔ انہوں نے مرکزی حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اس پر انتخابی بدانتظامی اور ہیرا پھیری میں ملوث ہونے کا الزام لگایا۔ گنڈا پور نے اپنے حقوق کی وکالت کرنے کے لیے پشاور میں پرامن احتجاج کے منصوبوں کا اعلان کیا، خاص طور پر مخصوص نشستوں کی الاٹمنٹ کے حوالے سے۔

ایک حتمی بیان میں، گنڈا پور نے اس بات کی تصدیق کی کہ وہ اپنے صوبے کے لوگوں کے حقوق پر زور دینے کے لیے ذاتی طور پر اسلام آباد جائیں گے۔ انہوں نے انتخابی دھاندلی میں ملوث افراد کے ساتھ مذاکرات کے خلاف اپنے غیر متزلزل موقف کا اعادہ کرتے ہوئے اس بات کا اعادہ کیا کہ اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ مذاکرات کے حوالے سے کوئی بھی فیصلہ پی ٹی آئی کی قیادت کرے گی۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

پاکستان اسٹاک ایکسچینج: 100 انڈیکس میں 578 پوائنٹس کی کمی

پاکستان اسٹاک ایکسچینج (PSX) میں آج نمایاں مندی رہی، 100 انڈیکس میں 578 پوائنٹس کی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *