شانگلہ میں مبینہ انتخابی دھاندلی کے خلاف احتجاج کے دوران جھڑپوں کے نتیجے میں ہلاکتیں

شانگلہ میں انتخابی دھاندلی کے خلاف مظاہروں کے دوران جھڑپیں ہوئیں، جس کے نتیجے میں ایک شخص جاں بحق ہوگیا۔ حلقہ این اے 11 میں تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار کی شکست کے بعد پی ٹی آئی کے کارکنوں نے الپوری میں مبینہ طور پر ڈپٹی کمشنر آفس کا گھیراؤ کیا اور ریٹرننگ افسر کی گاڑی کو آگ لگا دی۔

این اے 11 میں آزاد امیدوار حاجی سید فارین کی شکست کے ردعمل میں پی ٹی آئی کے حامیوں نے دھاندلی کا الزام لگاتے ہوئے ڈی سی آفس کے باہر شدید احتجاج کیا۔ ذرائع کے مطابق مظاہرین نے ایک سرکاری گاڑی کو آگ لگا دی۔ پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے ہوائی فائرنگ اور لاٹھی چارج کا سہارا لیا۔

پی ٹی آئی کے مظاہرین نے دعویٰ کیا کہ ریٹرننگ افسر کی گاڑی کا گھیراؤ جعلی ووٹوں کی موجودگی کی وجہ سے ہوا، جس کی وجہ سے فارین کی برتری ختم ہوگئی اور پاکستان مسلم لیگ نواز کے امیدوار کو کامیابی حاصل ہوئی۔ پی ٹی آئی کے کارکنوں نے یہ بھی الزام لگایا کہ پولیس کی فائرنگ کے نتیجے میں دو افراد ہلاک اور دس زخمی ہوئے۔

تاہم، پولیس نے پی ٹی آئی کے دو حامیوں کے مارے جانے کے دعوے کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ مظاہرین نے پولیس پر فائرنگ کی، جس کے نتیجے میں ایک مظاہرین گولی لگنے سے ہلاک اور دس زخمی ہوئے۔ زخمیوں اور جاں بحق افراد کو ریسکیو ٹیموں نے فوری طور پر ہسپتال منتقل کر دیا۔

سوات سے امیر کی شکست کے باوجود شانگلہ سے قومی اسمبلی کی نشست حاصل کی، پولیس نے احتجاج میں شامل دس سے زائد مظاہرین کی گرفتاری کی تصدیق کی۔

احتجاج سے قبل آزاد امیدوار حاجی سید فارین اور پی ٹی آئی رہنما شوکت یوسفزئی نے پی ٹی آئی کارکنوں کو ڈی سی سے بات چیت کے ذریعے تین دن میں معاملہ حل کرنے کی یقین دہانی کرائی تھی۔ تاہم مشتعل مظاہرین نے منتشر ہونے سے انکار کر دیا۔

یہ امر قابل ذکر ہے کہ این اے 11 شانگلہ کے 346 پولنگ اسٹیشنز سے غیر سرکاری اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق امیر مقام 59 ہزار 863 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار سید فارین 54 ہزار 311 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

وزیراعلیٰ پنجاب کا فرانزک ٹریننگ لیب کو یونیورسٹیوں کے ساتھ شراکت کرنے کا حکم

صوبے میں فرانزک سائنس کی تعلیم اور صلاحیتوں کو بڑھانے کے لیے ایک اہم اقدام …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *