کراچی ائیر پورٹ سے جعلی درہم بر آمد

کراچی ایئرپورٹ پر ایک اہم پیش رفت میں، حکام نے ایک مسافر کو جعلی اماراتی درہم کی کافی مقدار اسمگل کرنے کی کوشش کرنے والے کو روک لیا۔ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب یہ شخص کراچی سے شارجہ جانے والی پرواز میں سوار ہونے کی تیاری کر رہا تھا۔ مسافروں کے سامان کی معمول کی سکیننگ کے دوران، حکام کو تقریباً ایک لاکھ جعلی اماراتی درہم بیگ کے نچلے حصے میں چالاکی سے چھپائے گئے تھے۔

اسسٹنٹ کلکٹر کسٹمز نے آپریشن کی نگرانی کرتے ہوئے مشتبہ شخص کے مہارت سے جعلی کرنسی چھپانے پر زور دیا، جس کا پتہ صرف پیچیدہ سکیننگ کے طریقہ کار کے ذریعے کیا گیا تھا۔ اس دریافت کے نتیجے میں مسافر کی فوری گرفتاری عمل میں آئی، جسے اب اس غیر قانونی سرگرمی میں ملوث ہونے پر قانونی کارروائی کا سامنا ہے۔

یہ واقعہ جعلی کرنسی کی اسمگلنگ سے نمٹنے میں حکام کو درپیش جاری چیلنجوں کی نشاندہی کرتا ہے۔ اس طرح کی مجرمانہ سرگرمیاں نہ صرف مالیاتی نظام کی سالمیت کو نقصان پہنچاتی ہیں بلکہ معیشت اور عوامی اعتماد کے لیے بھی اہم خطرات کا باعث بنتی ہیں۔ کسٹم حکام کی چوکس کوششیں اور اس معاملے میں کی جانے والی تیز رفتار کارروائی غیر قانونی سرگرمیوں کو روکنے اور امن و امان کو برقرار رکھنے کے لیے حکومت کے عزم کی عکاسی کرتی ہے۔

یہ واقعہ ہوائی اڈوں اور دیگر داخلی مقامات پر مضبوط حفاظتی اقدامات کی اہمیت کی یاد دہانی کے طور پر کام کرتا ہے تاکہ جرائم پیشہ عناصر کو کمزوریوں کا فائدہ اٹھانے سے روکا جا سکے۔ یہ قانون نافذ کرنے والے اداروں اور بین الاقوامی شراکت داروں کے درمیان کرنسی کی جعلسازی جیسے بین الاقوامی جرائم سے مؤثر طریقے سے نمٹنے کے لیے مسلسل تعاون کی ضرورت کو بھی اجاگر کرتا ہے۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

وزیراعلیٰ پنجاب کا فرانزک ٹریننگ لیب کو یونیورسٹیوں کے ساتھ شراکت کرنے کا حکم

صوبے میں فرانزک سائنس کی تعلیم اور صلاحیتوں کو بڑھانے کے لیے ایک اہم اقدام …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *