آگ کا دریا عبور کرکے وزیراعلیٰ کی کرسی تک پہنچنا پڑا: مریم نواز

ایک حالیہ تقریب میں مریم نواز نے فیصلہ سازی کے بارے میں اپنے نقطہ نظر کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ جب اسے افراد کے خلاف فیصلے کرنے ہوتے ہیں، تو وہ بھاری دل کے ساتھ ایسا کرتی ہیں۔ اس جذبات کا اظہار پولیس فورس کی پاسنگ آؤٹ پریڈ کے دوران کیا گیا، جہاں انہوں نے پولیس کی وردی پہن کر شرکت کی۔

پریڈ کے دوران مریم نواز نے پولیس فورس میں خواتین کی اہمیت کو اجاگر کرتے ہوئے 650 خواتین اہلکاروں کی موجودگی پر خوشی کا اظہار کیا۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ خواتین افسران کو ڈیوٹی پر دیکھ کر انہیں خوشی ہوتی ہے اور موجودہ 7000 خواتین افسران کو ناکافی بتاتے ہوئے ان کی تعداد میں اضافے کی درخواست کی۔

پاسنگ آؤٹ پریڈ میں اپنی شرکت کے علاوہ، مریم نواز نے پہلے ورچوئل ویمن پولیس اسٹیشن کا افتتاح کیا، جس کا نام ‘مائی وائس، مریم نواز’ ہے۔ یہ اقدام خواتین کو بااختیار بنانے اور قانون نافذ کرنے والے اداروں میں ان کی حفاظت اور نمائندگی کو یقینی بنانے کے لیے ان کے عزم کو واضح کرتا ہے۔

پہلی بار پولیس کی وردی پہننے کے اپنے تجربے کی عکاسی کرتے ہوئے، مریم نواز نے اس ذمہ داری کے وزن کو نوٹ کیا جس کی یہ علامت ہے۔ اس نے بدلہ لینے کے بجائے مظلوم کے لیے انصاف کے حصول کی اہمیت پر زور دیا، ایک اصول جس کے بارے میں ان کا خیال ہے کہ ایک انصاف پسند معاشرے کے لیے بہت ضروری ہے۔

انھوں نے خطاب کے دوران کہا آگ کا دریا عبور کرکے وزیراعلیٰ کی کرسی تک پہنچنا پڑا
نواز شریف کی صاحبزادی ہونے کی وجہ سے تنقید اور دقیانوسی تصورات کا سامنا کرنے کے باوجود، مریم نواز انصاف اور عوام کی خدمت کے لیے اپنی کوششوں سے بے نیاز ہیں۔ اس نے بتایا کہ جب وہ گھر واپس آتی ہے، تو وہ اپنے والد کے ساتھ اپنے دن کے تجربات شیئر کرتی ہے، ان کے شکرگزار اور تعاون سے حوصلہ ملتا ہے۔

مریم نواز کی انصاف کے لیے وابستگی بطور وزیر اعلیٰ ان کے کردار سے بڑھ کر ہے۔ انہوں نے اپنے یقین کا اظہار کیا کہ پاکستان کے 120 ملین عوام کی خدمت کے لیے لگن اور فرض کے احساس کی ضرورت ہے۔ انہوں نے ان اہم ذمہ داریوں پر روشنی ڈالی جو خواتین اپنے گھروں اور معاشرے دونوں میں پوری کرتی ہیں، ان کے تعاون کو تسلیم کرنے اور ان کی قدر کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

تقریب کے دوران، مریم نواز نے پہلی خاتون پولیس افسر کو اعزازی تلوار سے نوازتے ہوئے دیکھا، ایک ایسا واقعہ جس نے انہیں قانون نافذ کرنے والے اداروں میں خواتین کے مستقبل کے لیے فخر اور امید سے بھر دیا۔ انہوں نے معاشرے میں انصاف اور مساوات کے قیام کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے دیانتداری کے ساتھ پاکستانی عوام کی خدمت کرنے کے اپنے عزم کا اعادہ کیا۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

زلفی بخاری پی ٹی آئی چیئرمین کے مشیر برائے بین الاقوامی امور مقرر

پی ٹی آئی کے سیکریٹری جنرل عمر ایوب کی جانب سے جاری کردہ باضابطہ نوٹیفکیشن …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *