عمران خان نے خیبرپختونخوا کابینہ کے لیے ناموں کی منظوری دے دی۔

ایک اہم پیش رفت میں، پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے بانی عمران خان نے خیبرپختونخوا (کے پی) کی کابینہ میں شامل کیے جانے والے افراد کے ناموں کی منظوری دے دی ہے۔ یہ فیصلہ کے پی میں صوبائی حکومت کی تشکیل میں ایک اہم قدم کی نشاندہی کرتا ہے، جو پاکستان کے سیاسی منظر نامے میں اسٹریٹجک اہمیت کی حامل ہے۔

ذرائع کے مطابق وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے اڈیالہ جیل میں عمران خان سے ڈیڑھ گھنٹے پر محیط تفصیلی ملاقات کی۔ ملاقات کے دوران کے پی کی سیاسی صورتحال اور جاری قانونی مقدمات کے مختلف پہلوؤں پر تبادلہ خیال کیا گیا جس میں صوبائی اور وفاقی سطح کے درمیان ہم آہنگی کی اہمیت کو اجاگر کیا گیا۔

ملاقات کے بعد وزیراعلیٰ محمود خان نے عمران خان کو صوبے کی مستقبل کی حکمت عملی کے بارے میں آگاہ کیا، کے پی کو درپیش اہم مسائل کے حل اور موثر طرز حکمرانی کو یقینی بنانے کے لیے حکومت کے عزم پر زور دیا۔

کابینہ کے ارکان کی منظوری پی ٹی آئی کی قیادت میں وسیع مشاورت کے بعد دی گئی ہے، جو کہ ایک اجتماعی فیصلہ سازی کے عمل کی عکاسی کرتی ہے جس کا مقصد کے پی حکومت میں کلیدی عہدوں پر کام کرنے کے لیے اہل افراد کا انتخاب کرنا ہے۔

کے پی کابینہ کے لیے جن ناموں کی منظوری دی گئی ان میں ممتاز شخصیات جیسے تاج محمد ترین، مشتاق غنی، ارشد ایوب، فضل شکور، ڈاکٹر امجد، ریاض خان، فیصل ترکئی، عاقب اللہ خان، اور مینا خان سمیت دیگر شامل ہیں۔ مختلف پس منظر اور مہارت کے حامل افراد کا یہ متنوع انتخاب جماعت کی شمولیت اور میرٹ کریسی کے عزم کو واضح کرتا ہے۔

مزید برآں، 10 سے زائد وزراء اور 4 مشیروں کی تقرری کی منظوری دی گئی ہے، جس سے صوبے کے عوام کو موثر طرز حکمرانی اور خدمات کی فراہمی کو یقینی بنانے کے لیے کے پی کابینہ کی جامع تنظیم نو کا اشارہ ملتا ہے۔

اڈیالہ جیل کے باہر میڈیا کو ایک بیان میں علی امین گنڈا پور نے شفافیت اور احتساب کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے گورننس پر پی ٹی آئی کے موقف کو دہرایا۔ انہوں نے کہا، “پی ٹی آئی قانون کی حکمرانی کی وکالت کر رہی ہے۔ ہم ایک ایسا نظام قائم کرنے کے لیے انتھک محنت کریں گے جہاں مستقبل میں کوئی مینڈیٹ چوری نہ کر سکے۔ ہماری ترجیح امن کا قیام، روزگار کی فراہمی، بنیادی سہولیات کو بہتر بنانا، تعلیم اور صحت کی دیکھ بھال کو بڑھانا ہے۔” سہولیات، اور دس لاکھ سے زائد خاندانوں کو مالی امداد فراہم کرنا۔”

مجموعی طور پر، عمران خان کی کے پی کابینہ کے لیے ناموں کی منظوری صوبے کی حکمرانی میں ایک نئے باب کا اشارہ دیتی ہے، جس میں کلیدی چیلنجوں سے نمٹنے اور کے پی کے عوام سے کیے گئے وعدوں کو پورا کرنے پر توجہ مرکوز کی گئی ہے۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

پاکستان اسٹاک ایکسچینج: 100 انڈیکس میں 578 پوائنٹس کی کمی

پاکستان اسٹاک ایکسچینج (PSX) میں آج نمایاں مندی رہی، 100 انڈیکس میں 578 پوائنٹس کی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *