صدر مملکت عارف علوی کا الوداعی بیان جاری

 صدر پاکستان ڈاکٹر عارف علوی نے ملک کے سربراہ مملکت کے طور پر اپنے دور کے اختتام پر الوداعی بیان جاری کیا ہے۔

صدر پاکستان کے آفیشل ٹوئٹر اکاؤنٹ پر جاری ہونے والے ایک بیان میں ڈاکٹر عارف علوی نے بطور صدر ملک کے عوام کی خدمت پر فخر کا اظہار کیا۔ اس نے اللہ سے اپنی کوتاہیوں کی معافی مانگی اور اپنے نیک اعمال کے اجر کی دعا کی۔ انہوں نے یہ بھی بتایا کہ اس دعا میں ان کی اہلیہ ثمینہ علوی بھی ان کے ساتھ شامل ہیں۔

ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ انہیں کوئی شک نہیں کہ پاکستان کا مستقبل روشن ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ان کے آفیشل ٹویٹر اکاؤنٹ پر پوسٹ کیا گیا یہ پیغام، جو انہوں نے اگست 2018 میں بنایا تھا، پاکستان کے 13ویں صدر کے طور پر ان کے آخری پیغام کی نشاندہی کرتا ہے۔ وہ یہ کھاتہ ملک کے 14ویں صدر کے حوالے کر رہے ہیں۔

صدر علوی کا بطور صدر دور کئی چیلنجز اور کامیابیوں سے عبارت رہا ہے۔ انہوں نے ممنون حسین کی جگہ 9 ستمبر 2018 کو عہدہ سنبھالا۔ اپنے دور میں انہوں نے صحت، تعلیم اور ڈیجیٹلائزیشن جیسے مسائل پر توجہ دی۔ انہوں نے بین الاقوامی سطح پر پاکستان کے مفادات کے فروغ میں بھی نمایاں کردار ادا کیا۔

ان کے دور کی ایک خاص بات COVID-19 وبائی مرض کا ردعمل تھا۔ صدر علوی نے وائرس کے پھیلاؤ پر قابو پانے کے لیے احتیاطی تدابیر اور ویکسینیشن مہم کی فعال وکالت کی۔ انہوں نے وبائی امراض سے پیدا ہونے والے چیلنجوں کا مقابلہ کرنے میں اتحاد اور یکجہتی کی اہمیت پر بھی زور دیا۔

پاکستان میں ڈیجیٹلائزیشن کو فروغ دینے میں صدر علوی کی کوششیں بھی قابل ذکر تھیں۔ انہوں نے گورننس اور عوامی خدمات کو بہتر بنانے کے لیے ٹیکنالوجی کے استعمال کی حوصلہ افزائی کی۔ ان کی قیادت میں، پاکستان نے ڈیجیٹل جدت طرازی میں ترقی کی، جس سے ایک زیادہ مربوط اور موثر معاشرے کی راہ ہموار ہوئی۔

صدر مملکت کو الوداع کہتے ہوئے صدر علوی نے اپنے دور حکومت میں حمایت اور تعاون پر پاکستانی عوام کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے ملک کی ترقی میں کردار ادا کرنے پر مسلح افواج، عدلیہ اور دیگر اداروں کا شکریہ ادا کیا۔

آخر میں، صدر عارف علوی کا الوداعی بیان پاکستانی عوام کی خدمت کے لیے ان کی لگن اور ملک کے مستقبل کے لیے ان کی پر امید ہے۔ صدر کے طور پر ان کے دور کو مختلف چیلنجوں سے نمٹنے اور پاکستان کے مفادات کو فروغ دینے کے عزم کے لیے یاد رکھا جائے گا۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

اسلام آباد ہائی کورٹ نے توہین عدالت کیس میں فواد چوہدری کا جیل ٹرائل کالعدم قرار دے دیا

اسلام آباد ہائی کورٹ نے سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری کے حق میں فیصلہ سناتے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *