گلگت، ہنزہ اور اسکردو کے علاقوں میں زلزلے کے شدید جھٹکے

گلگت، ہنزہ اور اسکردو کے علاقوں میں زلزلے کے شدید جھٹکے محسوس کیے گئے، جس سے علاقے میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے اور مکینوں میں خوف وہراس پھیل گیا۔ زلزلہ پیما مرکز کے مطابق، زلزلے کی شدت 5.2 تھی، اس کا مرکز گلگت سے 45 کلومیٹر جنوب مشرق میں واقع تھا۔ اس کی گہرائی 25 کلو میٹر تھی۔

اس کے اثرات گلگت بلتستان کے غذر، دیامر، گانچھے اور کھرمنگ سمیت متعدد قصبوں اور دیہاتوں میں محسوس کیے گئے۔ زلزلے کے جھٹکوں کے بعد لوگ مزید آفٹر شاکس کے خوف سے گھروں سے باہر نکل آئے۔ کچھ علاقوں میں بجلی کی فراہمی میں خلل پڑا جس سے افراتفری اور افراتفری میں اضافہ ہوا۔

زلزلے کی شدت کے باوجود فوری طور پر کسی جانی یا مالی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ملی ہے۔ تاہم، صورتحال کا ابھی بھی جائزہ لیا جا رہا ہے، اور حکام ہائی الرٹ پر ہیں۔ ریسکیو ٹیمیں اور ہنگامی خدمات اسٹینڈ بائی پر ہیں، چوٹوں یا ساختی نقصان کی کسی بھی اطلاع کا جواب دینے کے لیے تیار ہیں۔

اس خطے میں زلزلے غیر معمولی نہیں ہیں، جو زلزلہ کے لحاظ سے ایکٹو زون میں آتا ہے۔ ناہموار علاقہ اور بہت سی برادریوں کا دور دراز مقام کسی آفت کی صورت میں امدادی سرگرمیوں کے لیے چیلنجز کا باعث بنتا ہے۔ مقامی حکام رہائشیوں پر زور دے رہے ہیں کہ وہ چوکس رہیں اور آفٹر شاکس کے دوران نقصان کے خطرے کو کم کرنے کے لیے حفاظتی ہدایات پر عمل کریں۔

زلزلہ فطرت کی غیر متوقع قوتوں اور ان کے اثرات کو کم کرنے میں تیاری کی اہمیت کی یاد دہانی کا کام کرتا ہے۔ جیسے ہی متاثرہ علاقوں کی بحالی اور تعمیر نو شروع ہو جائے گی، تمام مکینوں کی حفاظت اور بہبود کو یقینی بنانے پر توجہ دی جائے گی۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

سونے کی قیمتوں میں نمایاں کمی: ایک تولہ کی قیمت اب 242,000 روپے ہے

مقامی مارکیٹ میں سونے کی فی تولہ قیمت میں 6200 روپے کی کمی دیکھی گئی۔ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *