پاکستان میں فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے تاجروں کے لیے ایک نئی لازمی رجسٹریشن اسکیم کا اعلان کر دیا

پاکستان میں فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے تاجروں کے لیے ایک نئی لازمی رجسٹریشن اسکیم کا اعلان کیا ہے، جس کا مقصد ٹیکس وصولی کو ہموار کرنا اور مزید کاروباروں کو ٹیکس نیٹ میں لانا ہے۔ ایک حالیہ نوٹیفکیشن میں بیان کردہ اس اسکیم کو چھ بڑے شہروں بشمول کراچی، لاہور، اسلام آباد، راولپنڈی، کوئٹہ اور پشاور میں لاگو کیا جائے گا۔

ایف بی آر کے مطابق، رجسٹریشن اسکیم بنیادی طور اپنے کاروبار کو رجسٹر کرنے اور اپنی دکانوں کے سالانہ کرائے کی قیمت کی بنیاد پر ٹیکس ادا کرنے کی ضرورت ہوگی۔ اسکیم کے تحت ہر دکان کا مالک کم از کم 1200 روپے سالانہ انکم ٹیکس ادا کرنے کا پابند ہوگا۔ ایف بی آر نے ان تاجروں کو بھی ریلیف دیا ہے جو سال 2023 کے لیے پہلے ہی انکم ٹیکس ادا کر چکے ہیں، اس بات کو یقینی بناتے ہوئے کہ ان پر دوہرے ٹیکس کا بوجھ نہیں ڈالا جائے گا۔

رجسٹریشن کا عمل یکم اپریل سے شروع ہونے والا ہے، تاجروں پر زور دیا گیا ہے کہ وہ چھوٹے تاجروں اور دکانداروں کے لیے خصوصی طریقہ کار کے تحت اسکیم پر رائے جمع کریں۔ یہ تاثرات ممکنہ طور پر ایف بی آر کو مکمل نفاذ سے پہلے اسکیم کو بہتر بنانے اور بہتر کرنے میں مدد دے گا۔

تعمیل کو نافذ کرنے کے لیے، ایف بی آر نے ٹیکس کی جلد ادائیگی کے لیے مراعات متعارف کرائی ہیں۔ وہ تاجر جو ہر مہینے کی 15 تاریخ سے پہلے اپنا ٹیکس ادا کرتے ہیں، انہیں 25% رعایت ملے گی، جس سے ٹیکس کی فوری تعمیل کی حوصلہ افزائی ہوگی اور تاجروں پر مالی بوجھ کم ہوگا۔

اسکیم کی عدم تعمیل کی صورت میں، ایف بی آر نیشنل بزنس رجسٹر میں زبردستی رجسٹریشن کا سہارا لے گا، اس بات کو یقینی بناتے ہوئے کہ تمام اہل تاجروں کو ٹیکس نیٹ میں لایا جائے۔ مزید برآں، تاجروں اور دکانداروں کا ایک مرکزی ڈیٹا بیس ٹریڈر فرینڈلی ایپ کے ذریعے قائم کیا جائے گا، جو کاروبار کے لیے آسان رجسٹریشن اور ٹیکس کی تعمیل کی سہولت فراہم کرے گا۔

مجموعی طور پر، نئی رجسٹریشن اسکیم ٹیکس محصولات میں اضافے، ٹیکس کی تعمیل کو بہتر بنانے، اور زیادہ شفاف اور موثر ٹیکس نظام بنانے کے لیے حکومت کی وسیع تر کوششوں کا حصہ ہے۔ مزید کاروباروں کو ٹیکس نیٹ میں لا کر اور ٹیکس وصولی کے عمل کو آسان بنا کر، ایف بی آر کا مقصد پاکستان میں محصولات کی پیداوار کو بڑھانا اور معاشی نمو کو فروغ دینا ہے۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

اسلام آباد ہائی کورٹ نے توہین عدالت کیس میں فواد چوہدری کا جیل ٹرائل کالعدم قرار دے دیا

اسلام آباد ہائی کورٹ نے سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری کے حق میں فیصلہ سناتے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *