ہم دکھی ہیں ایک کے بعد ایک ہماری وکٹس گرتی گئی ، عبد اللہ شفیق

ہم دکھی ہیں ایک کے بعد ایک ہماری وکٹس گرتی گئی لیکن ہمیں امید ہے ہم اس سے ابھر جائیں گے
قومی کرکٹ ٹیم کے بلے باز عبداللہ شفیق نے کہا بابر اعظم ہماری ٹیم کے بہترین بیٹسمین ہیں، وہ آنے والے میچ میں اچھا کھیلیں گے۔میلبرن ٹیسٹ سیریز کے دوسرے روز کے اختتام پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ بیٹنگ یونٹ ہونے کے تحت ہم دکھی ہیں کہ آج ایک کے بعد ایک ہماری وکٹس گرتی گئی لیکن ہمیں امید ہے کہ ہم اس سے ابھر جائیں گے۔
انہوں نے کہا کہ ہمیں یہ بات واضح طور پر معلوم ہے کہ ہمیں ایک اچھی پارٹنرشپ بنانی ہے، ہمیں بیٹنگ کے دوران جو سب سے بڑا مسئلہ پارٹنرشپ درپیش ہے ہم ایک ٹیم کے طور پر کام کرنا چاہتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ بولنگ یونٹ کے طور پر پہلے ٹیسٹ کے ۷مقابلے ہم نے اس ٹیسٹ میں زیادہ بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کیا، ہمارا پلان ہے کہ ہم انہیں آگے بھی اچھی بولنگ کروائیں ، یہاں کی کنڈیشنز پاکستان کے مقابلے میں مختلف ہیں، جب ہم آسٹریلیا کے خلاف بولنگ کر رہے تھے تب پچ کچھ مشکل تھی مگر اب یہ بہتر ہے، ہم محمد رضوان اور عامر جمال کے درمیان جاری پارٹنرشپ کے لیے پر امید ہیں۔
میچ میں کیچ چھوٹنے کے سوال پر جواب دیتے ہوئے عبداللہ شفیق نے کہا کہ کوئی بھی ٹیم کیچ نہیں چھوڑنا چاہتی مگر یہ کرکٹ ہے، اس میں کبھی اچھا ہوتا ہے تو کبھی برا لیکن اگر میں وہ کیچ پکڑ لیتا تو ہماری پوزیشن بہتر ہوجاتی، یہ سب کھیل کا حصہ ہے۔انہوں نے بتایا کہ ٹیم مینیجمنٹ کو ہم پر پورا بھروسہ ہے پر کبھی چیزیں ویسی نہیں ہوتی جیسا ہم چاہتے ہیں، ہم پوری محنت کر رہے ہیں اور ہم تیار ہیں لیکن یہ ٹیسٹ کرکٹ ہے اس میں مشکل ہوجاتی ہے۔
عبداللہ شفیق کا کہنا تھا کہ بابر بھائی ہمارے بہترین بیٹسمین ہیں اور جس طرح کی فارم میں ہم انہیں نیٹ میں کھیلتے ہوئے دیکھتے ہیں تو اس سے معلوم ہوتا ہے کہ وہ اچھی کنڈیشن میں ہیں، آج ان کی اننگز اچھی نہیں رہی لیکن امید ہے کہ وہ آنے والے میچ میں اچھا کھیلیں گے۔

About نشرح عروج

Nashra is a journalist with over 15 years of experience in the Pakistani news industry.

Check Also

امریکی رکن کانگریس نے کملا ہیرس کے خلاف مواخذے کی دستاویزات جمع کرائیں

امریکی رکن کانگریس اینڈی اوگلس نے باضابطہ طور پر نائب صدر کملا ہیرس کے مواخذے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *